click on book to show pdf

دعا عند اھل ابیت علیہم السلام جلداول

دعایعنی بندے کا اپنے آپکو اللہ کے سامنے پیش کرنااور اللہ کے سامنے اپنے آپ کو محاتج محض سمجھنا ۔ اپنی محتاج اوراللہ کی بے نیازی کا اقرارکرنا اور شاید یہی وجہ ہے کہ دعا کو روح عبادت اور مغز عبادت کہا جاتا ہے۔اورعبادت ہی انسان کی خلقت کا ہدف بھی ہے۔اورانسان کے اللہ سےقریب […]

  • محمد مہدی آصفی
دعا عند اھل ابیت علیہم السلام جلداول
Rate this post
دعا عند اھل ابیت علیہم السلام  جلداول
اس کتاب کے بارے میں
  • جائزہ

    دعایعنی بندے کا اپنے آپکو اللہ کے سامنے پیش کرنااور اللہ کے سامنے اپنے آپ کو محاتج محض سمجھنا ۔ اپنی محتاج اوراللہ کی بے نیازی کا اقرارکرنا اور شاید یہی وجہ ہے کہ دعا کو روح عبادت اور مغز عبادت کہا جاتا ہے۔اورعبادت ہی انسان کی خلقت کا ہدف بھی ہے۔اورانسان کے اللہ سےقریب ہونے کاذریعہ بھی ہے۔اورمعصوم کا فرمان ہے کہ علیکم بالدعا دنکم لاتتقربون بمثلہ " یعنی تم دعاکرو خدا سے قریب کرنے میں اس سے زیادہ بہتر کوئی چیز نہیں ہے۔ لیکن ضرورت ہے کہ دعا اپنے خاص آداب کے ساتھ کی جائے ۔ پیش نظر کتاب بھی اسی چیز  حوالے سے لکھی گئی ہے ۔

  • تفصیلات
    • محمد مہدی آصفی
  • جائزے